بے صبر انسان کے نقصانات



اگر آپ آج اپنے اندر ایک نیا ارادہ پیدا کریں اور سوچیں کہ آج کے بعد آپ کی پوری زندگی بدل جائے گی۔

تو کیا ایسا ہو سکتا ہے یا نہیں؟

جی ہاں! ایسا بالکل ہو سکتا ہے۔ صرف آپ کے سوچنے سے آپ کی پوری زندگی بدل سکتی ہے۔

سب سے پہلے آپ کو اپنے اندر ایک ارادہ پیدا کرنا ہوگا اپنی نئی زندگی شروع کرنے کا۔ آپ کو اپنے اندر ایک نئی سوچ پیدا کرنی ہوگی اور سوچنا ہو گا کہ آج سے جسے میں اپنی ایک نئی زندگی شروع کرنے جا رہا ہوں۔

لیکن صرف یہ سب سوچنا کافی نہیں ہے۔ کیونکہ ہماری ایک بہت بری عادت ہے وہ یہ ہے کہ ہم کوئی بھی مشکل کا اسی وقت حل چاہتے ہیں۔ جو کہ ممکن نہیں ہے۔
آپ ذرا غور کریں کہ اگر کوئی بھی کام ہے۔ تو اس کو پورا ہونے میں تھوڑا وقت ضرور لگتا ہے۔ اسی طرح ہمیں ایک فیلڈ میں کامیاب ہونے کے لئے تھوڑا وقت ضرور لگے گا۔ جس کے لئے ہمیں صبر کرنا ہوگا۔

مگر مزے کی بات یہ ہے کہ ہمارے اندر ذرا بھی صبر نہیں ہے۔ اور اسی وجہ سے ہمارا آدھے سے زیادہ دن پریشانی میں گزرتا ہے۔ صرف اسی وجہ سے کیوں کہ ہم 
صبر نہیں کرتے۔

جس طرح ایک درخت کو بڑا ہونے میں اور پھل دینے میں ٹائم لگتا ہے بالکل اسی طرح ہمیں کامیاب ہونے میں ذرا ٹائم لگے گا لہٰذا صبر کرنا سیکھیں اور کوشش کرتے رہے مجھے یقین ہے کہ آپ کامیاب ضرور ہوں گے۔

0 Comments:

وفا کو بے وفا ہونے میں دیر نہیں لگتی | اردو شاعری


کوئی منافقت آتی نہیں مجھے
نا جانے کیسے رشتے نبھا سکوں گا میں


وفا کو بے وفا ہونے میں دیر نہیں لگتی 
اگر ایک بہانہ مل جائے تو محبت بدلے میں دیر نہیں لگتی

اکیلا تو مجرم نہیں تھا دوبارہ تمہارے دیدار کا
جب پہلی دفعہ دیکھا میں نے مسکرائے تو ضرور ہوں گے


دوسروں کا درد مٹانے والا کیسے بن جاؤ آخر
نہ درد مٹانے دیتے ہیں نہ خوشی منانے دیتے ہیں


صبر اور قدر تھی کسی زمانے میں قیمتی
آج صبر بھی سستا ہے قتل بھی سستا ہے


آج جسموں کو دیکھنے کا نام ہے محبت
ایمان دیکھو ہمارے سستے داموں بکتے ہیں


کبھی اس تنہائی سے ڈر لگتا تھا
آج انسانوں کے لہجے سے ڈر لگتا ہے


کبھی زمانہ بے صبر تھا اپنی عزت بنانے میں
آج زمانہ بے صبر ہے اپنی عزت گوانے میں

0 Comments:

وقت بار بار ملتا ہے زندگی بدلنے کیلئے



دنیا میں کچھ لاچار لوگ ہیں یعنی نہ تو ان کے ہاتھ پاؤں ہیں جس کی وجہ سے وہ  ہماری طرح چل پھر نہیں سکتی اور ان کی ساری زندگی صرف ویل چیئر پر گزرتی ہے۔
ہم جانتے ہیں کہ یہ لوگ اپنی زندگی میں کتنی سٹرگل کرتے ہیں؟ یہ لوگ اپنی زندگی میں بہت زیادہ سٹرگل کرتے ہیں۔ اتنی کہ ہم سوچ بھی نہیں سکتے۔
تو اگر یہ لوگ زندگی میں کامیاب ہو سکتے ہیں تو ہم کیوں نہیں۔
کیا آپ جانتے ہیں کہ ہم لوگ کیوں کامیاب نہیں ہو پاتے؟ کیونکہ ہم لوگ خود کو کمزور سمجھتے ہیں یہ ہماری ناکامی کی بہت بڑی وجہ ہے۔
آپ لوگ خود سوچیں اور کمپیریزن کریں اپنا اور ان لوگوں کا جن کی پوری زندگی ویل چیئر پر گزرتی ہے۔ کیا ہم لوگ کمزور ہیں یا پھر ویل چیر والے لوگ۔ اگر دیکھا جائے تو ہمیں یہ لوگ لا چار نظر آتے ہیں۔ بے بس نظر آتے ہیں اور لگتا ہے کہ یہ لوگ اپنی زندگی میں کچھ نہیں کر پائیں گے۔ لیکن یہ سوچ غلط ہے کیونکہ یہ لوگ مینٹلی طور پر بہت زیادہ مضبوط ہے۔ ان کے ارادے ہم سے زیادہ مضبوط ہیں ان کی سوچ ہم سے زیادہ مضبوط ہے اور ہم لوگ اتنے ہی زیادہ کمزور۔
اگر آپ میری اس بات پر سوچیں گے اور ذرا غور کریں گے تو آپ کو اس کے علاوہ کوئی دوسرا فرق نظر نہیں آئے گا۔
آپ سب کے لئے ایک پیغام ہے کہ اگر آپ کو کوئی ایسا انسان ملتا ہے جو کہ ہماری طرح چل پھر نہیں سکتا۔ تو ہمیں ان کا مذاق نہیں بنانا چاہیے ان کو ذرا بھی فیل نہیں کروانا چاہیے کہ وہ کچھ کر نہیں سکتا۔ ہو سکتا ہے کہ جو آپ کے لئے ناممکن ہے شاید وہ کرلے۔

0 Comments:

اپنا مقدر خود بنانا سیکھیں



اکثر ہم لوگ خود کو بلیم کرتے ہیں کہ ہمارے اندر ٹیلنٹ کی کمی ہے۔جس کی وجہ سے ہم ترقی نہیں کر پاتے اور آگے نہیں بڑھ پاتے۔
جبکہ حقیقت میں یہ سچ نہیں ہے اصل چیز ٹیلنگ نہیں ہیں میں جو چیز ہمیں کامیاب بناتی ہے وہ ہمارے اندر کا جنون ہےاگر آپ کے اندر جوش ہو گا تو پھر یہ ٹیلنٹ آپ کے پیچھے آئے گا۔

اگر آپ اپنی زندگی میں کوئی بھی کام کرنا چاہتے ہیں کوئی ایسا کام تو پہلے کسی نے نہیں کیا تو آپ کو ایک چیز کا مقابلہ کرنا ہوگا۔
یعنی ناکامی کا فیل ہونے کا۔ہم میں سے کچھ لوگ ایک بار ناکام یا فیل ہونے کے بعد ڈیپریشن میں چلے جاتے ہیں۔اور بری طرح مایوس ہو جاتے ہیں۔
اگر دیکھیں تو ہمارے پاس صرف ایک زندگی ہے اور اس کو ہم نے کیسے گزارنا ہے ڈیپریشن کے ساتھ یا پھر خوشی کے ساتھ اس کا انتخاب ہمارے اوپر ہے۔ بلکہ ہم سب کے پاس ہے۔

ایک بار آپ خود سوچیں کیا زندگی میں فیل ہونا، ناکام ہونا او ربا ربا ر گڑنا کیا یہ ہماری اصل میں ناکامی ہے۔

آپ میری بات کا یقین کریں۔ کہ جب تک ہم اپنی ناکامی کا سامنا نہیں کریں گے تب تک ہم کوئی ایسا کام نہیں کر سکتے جو پہلے کسی نے نہ کیا ہو۔ اس کی مثال اسی طرح ہے کہ جیسے ہم نے چلنا اور سائیکل چلانا بغیرگرنے کے نہیں سیکھا۔ اسی طرح آپ اپنی زندگی میں کوئی بہتر کام نہیں کر سکتے یعنی وہ کام جس سے آپ زندگی میں آگے بڑھ پائیں۔ اگر آپ نے اپنی زندگی کو بہتر کرنا ہے۔ آگے بڑھنا ہے تو اسی طرح گرنے کے بعد دوبارہ اٹھنا ہوگا بار بار اٹھنا ہوگا۔

کبھی فیل ہونے سے نہیں ڈرو۔ کیونکہ ابھی آپ کے اندر جوش ہے۔ ابھی آپ کے اندر جنون ہے۔ اس لئے کسی کام کو بھی درمیان میں مت چھوڑو۔ جب تک وہ پورا نہ ہو جائیں۔ اگر آپ نے اس کام کو پورا کرنا ہے۔ تو آپ کو اپنی ناکامی کا سامنا کرنا ہوگا۔ بار بار ناکام ہونے کے باوجود آپ کو یہ کام پورا کرنا ہوگا۔ ناکام ہونا یا فیل ہونا کوئی بری بات نہیں ہے۔ بلکہ کسی کام کو درمیان میں چھوڑ دینا یہ بری بات ہے۔ جو لوگ ایسا کرتے ہیں وہ کبھی کامیاب نہیں ہو پاتے۔ کبھی زندگی میں ت ترقی نہیں کر پاتے۔ ٖفیصلہ آپ کے اوپر ہے۔

0 Comments:

انسان کی بربادی اور کامیابی کا اہم راز



لوگوں کی کسی بات کی فکر مت کرو کیونکہ ان کو ہماری زندگی سے کوئی لینا دینا نہیں۔ ہم مرے یا جیے ان کو کوئی فرق نہیں پڑتا۔
ایک بات اپنے دماغ میں بیٹھا لے- جو بھی کرنا ہے اپنی ہمت پر کرنا ہے چاہے چاہ نوکری تلاش کرنی ہے چاہے کاروبار کرنا ہے۔ چاہے تعلیم حاصل کرنی ہے۔


ایک بات اور یاد رکھیں اگر آپ کے پاس پیسے نہیں ہوں گے تو آپ کے اپنے بھی آپ کا ساتھ چھوڑ جائیں گے اس لئے یہ چیز بہت ضروری ہے کہ آپ پیسے کی اہمیت کو پہچان لے۔اور پیسے کمانے کے مختلف طریقے تلاش کریں نہ کہ پیسہ ضائع کرنے کے۔

اگر ہم دیکھیں تو ہمارے آس پاس بہت کچھ ہے ہمارے کرنے کے لئے۔
آج اگر ہمارے پاس کوئی جاب نہیں ہے۔تو اس میں پریشان ہونے کی ضرورت نہیں بلکہ اپنی سوچ کو بہتر کروں کہ اگر آج میرے پاس جاب نہیں ہیں تو ہو سکتا ہے کہ کل لوگ میرے پاس آئے جاب تلاش کرنے کے لئے۔یعنی آپ سوچیں کہ میں خود لوگوں کو نوکری پر وائڈ کروں گا۔

اگر ہم چاہیں تو ہم بہت کچھ کر سکتے ہیں۔ضرورت ہے تو صرف ایک قدم آگے بڑھانے کی ایک قدم اٹھانے کی، ضرورت ہے ہمت کی،محنت کی،ایمانداری کی اور جنون کی۔
جب یہ جنون ہمارے اندر آئے گا تو مجھے یقین ہے کہ آپ ضرور کامیاب ہو گی۔


0 Comments:

دنیا کا سب سے بہترین بزنس مین

‏آج دنیا کا سب سے امیر انسان جیب بیسوں ہے سے پہلے بل گیٹس تھا لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ ان دونوں سے پہلے دنیا کا سب سے امیر ترین انسان کون تھا
انیس سو بیاسی سے لے کر آنے والے کئی سالوں تک جو سب سے امیر انسان تھا اس کا نام تھا سیم وال مارٹ اس آدمی کی موت ہوئی تو اس کے بعد دنیا کا سب سے امیر انسان بنا بل گیٹس۔
سیم والمارٹ کے امیر ہونے کی وجہ یہ تھی ایک ایسی کمپنی بنائی تھی جس نے ڈیجیٹل دنیا کو ایک جگہ پر اکٹھا کر دیا تھا اور یہ کمپنی تھا والمارٹ جو کہ اج بھی دنیا کا سب سے زیادہ ریوینو جرنیٹ  کرنے والی کمپنی ہے۔ مطلب یہ بھی دنیا کی سب سے بڑی کمپنیوں میں سے ایک ہے جس نے 2017 میں 486 بلین کا ریونیو جرنیٹ کیا تھا۔
جب کہ دنیا کی سب سے بڑی کمپنی ایپل بھی اس کا مقابلہ نہیں کر سکی کیونکہ اس نے اسی سال 255 بلین کا ریونیو جنریٹ کیا تھا جو کہ والمارٹ سے کم ہے۔
ریسرچ کے مطابق آج دنیا میں والکاٹ کے 11277 سٹور ہیں اس میں ٹو پوائنٹ تین ملین لوگ کام کرتے ہیں۔
اس انسان کی کامیابی کا راز کیا ہے  اس آدمی نے اتنی ترقی کیسے کی۔ اور یہ سب اس نے کہاں سے سیکھا یہ سب باتیں اور اس کے پرنسپل میں بتانے والا ہو اس ویڈیو میں۔
سیم والٹن 1 غریب خاندان سے تعلق رکھتا ہے جس کے ماں باپ بہت محنتی لوگ تھے اس لئے وہ سب ہمیشہ پیسے کی عزت کرتے تھے اور اسی چیز کا فائدہ والمارٹ کو سب سے زیادہ ہوا۔
آج بچوں کا کسی جگہ پر کام کرنا بہت برا سمجھا جاتا ہے۔ لیکن وال مارٹ اپنے بچپن سے ہی پیسے کماتے تھے۔
وہ پرندے اور مختلف جانور بیچتے تھے یا پھر کبھی نیوز پیپر اور میگزین وغیرہ بیچتے تھے اس لئے انہیں پیسے کی قدر اور بھی زیادہ ہونے لگی اگر وال مارٹ چاہتے تو وہ ایک امیر آدمی کی طرح اپنی زندگی گزار سکتے تھے لیکن انہوں نے ایک عام آدمی کی طرح اپنی زندگی گزاری۔ اور یہ اس کی کامیابی کی دوسری بڑی وجہ ہے۔
کہ وہ اپنا میکسیمم پرافٹ دوبارہ اپنے بزنس میں لگا دیتے تھے بجائے امیر لوگوں کی طرح زندگی گزارنے کے۔ تو اس طرح والمارٹ نے دنیا کا سب سے بڑا بزنس بنایا۔
اب اس سے جو پہلا سبق ملتا ہے وہ ہے پیسے کی قدر۔ آپ کو ایسے کئی لوگ ملیں گے جو کہتے ہیں کہ ان کے پاس بزنس کرنے کے لیے پیسے نہیں ہیں۔ تو وہ وال مارٹ کے پاس بھی نہیں تھے آگر ہمیں ان کی طرح پیسے کی قدر ہوجائے تو ہم بھی ان کی طرح کچھ برا کر سکتے ہیں۔
وال مارٹ کی ایک اور عادت تھی کہ وہ جو بھی کام کرتے تھے ہمیشہ بیسٹ بننے کے لئے کرتے تھے۔ وہ سوچتے تھے کہ ہمیشہ اچھا کرنا اور جیتنا ان کا حق ہے اور یہی چیز نے انہیں کاروبار میں اتنا کامیاب بنایا۔
اس کی کامیابی کا دوسرا راز یہ تھا کہ وہ اپنی زندگی میں جس بھی نیئے انسان سے ملتے ہیں اس سے اچھے انداز میں بات کرتے تھے چاہے وہ اسے جانتے ہیں یا نہیں۔ نیوز کے مطابق وال مارٹ اپنی کمپنی کے اک صفائی والے انسان سے لے کر کمپنی کے مینیجر تک کہ لوگوں کے نام جانتے تھے اور صفائی والے انسان سے اسی طریقے سے بات کرتے تھے جس طرح کمپنی کے منیجر کے ساتھ۔ اور یہ بہت اچھی بات تھی

0 Comments:

لڑکیوں اور لڑکوں کے بڑھتے ہوئے ناجائز تعلقات



آج کل ہماری سوسائٹی میں ایک نیا مسئلہ پیدا ہو رہا ہے۔ اور اس سے بڑی بات یہ ہے کہ ہم اس مسئلے کو بالکل ہی نظر انداز کر رہے ہیں۔
اور یقینا یہ بات آپ خود بھی جانتے ہوں گے کہ وہ مسئلہ کونسا ہے۔ جی ہاں بالکل آپ یہ بات جانتے ہیں۔ لیکن کبھی غور نہیں کیا ہوگا۔
یعنی کے ہم سب جانتے ہیں کہ آج کل لڑکے اور لڑکیوں میں ناجائز تعلقات اور افیئرز میں اضافہ ہو رہا ہے۔ لیکن اس کی کیا وجہ ہے۔ ہم نے یہ سوچنے پر بھی کبھی غور نہیں کیا۔
تو اس پر میں نے ایک ویڈیو شیر کی ہے ہے۔ جس جس کی مدد سے آپ یہ تمام وجوہات جان سکتے ہیں۔ کہ آخر یہ سب کیوں ہو رہا ہے۔ کیوں لڑکے اور لڑکیاں موبائل کا غلط استعمال کر رہی ہیں۔ کیوں ان کے درمیان ناجائز تعلقات بڑھتے جا رہے ہیں۔ یہ سب جاننے کے لئے آپ اس ویڈیو کو ضرور دیکھیں۔ شکریہ


مزید پرھیں:لو میرج نکام ہونے کی وجوہات

0 Comments:

لو میرج نکام ہونے کی وجوہات







ہم لوگوں کی میرج لائف میں کافی مشکلات آتی ہیں اور آج کل ایک ایشو ہمارے معاشرے میں بڑھتا جا رہا ہے کہ ہائرایجوکیشن لینے کے باوجود ہمارے اندر ایک دوسرے کی غلطی برداشت کرنے کی ذرا سی بھی طاقت موجود نہیں ہے

دیکھا جائے تو ہم لوگ یعنی لڑکا اور لڑکی شادی سے پہلے تو ایک دوسرے کے ساتھ بہت محبت کرتے ہیں اور بہت بڑے بڑے دعوے کرتے ہیں لیکن جیسے ہی ہماری شادی ہوتی ہے تو شادی کے بعد ہم چار ماہ بھی خوشی سے نہیں گزار پاتیں جس کی وجہ سے نوبت طلاق لینے تک پہنچ جاتی ہے اور ایک لڑکی جس کے مختلف روپ ہوتے ہیں شادی سے پہلے تو وہ ہمارے ساتھ پانچ سال گزار سکتی ہے لیکن شادی کے بعد نہیں گزار پاتی۔
لو میرج کے بعد طلاق ہونے کی مختلف وجوہات ہیں جو کہ آپ اس ویڈیو میں دیکھ سکتے ہیں۔

0 Comments: